Get Adobe Flash player

March 2017

31 March 2017

آئیسکوکی بجلی چوروںکے خلاف کاروائیاں 10پکڑے گئے

 بجلی چوری ملکی خزانے اور دیگر صارفین کے حق پر ڈاکہ ہے جس کی روک تھام کیلئے اسلام آباد الیکٹرک سپلائی کمپنی ( آئیسکو ) کے چیف ایگزیکٹو کی ہدایات پر آئیسکو ریجن میں بجلی چوروں کے خلاف بلا امتیاز کاراوئیاں کی جار ہی ہیں اور اسی سلسلے میں آئیسکو ریجن سے مزید 10بجلی چوروں کیخلاف کاروائی کی گئی ہے۔ ترجمان آئیسکو کی جانب سے جاری کردہ ایک پریس ریلز کے مطابق آئیسکو ریجن کے اٹک سر کل سے 05، جہلم سر کل سے 03 اورچکوال سرکل سے 02 بجلی چوربجلی چوری کرتے ہوئے پکڑے گئے ۔جن کے خلاف بجلی چوری کے نئے ترمیم شدہ قوانین کے تحت قانونی کاروائی کے لئے متعلقہ تھانوں میں درخواستیں بھی دے دی گئیں ہیں ۔ آئیسکو  اپنے معزز صارفین سے اپیل کرتی ہے کہ اپنا قومی فریضہ سمجھتے ہوئے بجلی چوری کی اطلاع اپنے قریبی آئیسکو دفاتر ،آئیسکو کی نئی ایس ایم ایس سروس روشنی8398 یا آئیسکو کی ہیلپ لائن 118 پر دیں۔ صارفین آئیسکو سامان سر وسز پر بجلی چوری کی اطلاع ، بجلی بل کی وصولی میں تاخیر،زائد بلنگ اور لو وولیٹج کی شکایات کے ساتھ ساتھ لوڈشیڈنگ شیڈول، ٹیرف میں تبدیلی اور کنکشن کے متعلق معلومات بھی حاصل کر سکتے ہیں۔

Read more

سی ڈی اے مین کاملازم اپنے حق کیلئے دربد ر کی ٹھو کر یں کھا نے پر مجبو ر

 سی ڈ ی اے اسٹیٹ کے اعلی افسران کی ملی بھگت سے سی ڈی اے مینٹینسں ٹو کا ریٹائرڈ ملازم اپنا حق حا صل کر نے کے لیے دربد ر کی ٹھو کر یں کھا نے پر مجبو ر ہوگیا ، 2006 میں سی ڈی اے کی جانب سے پلاٹ نمبر 763 سیکٹر D.12میں الاٹ ہوا،جس کا فیصلہ وفاقی محتسب نے بھی دے دیا ،اور سی ڈی اے سی بی سے نے بھی ممبر کو لیٹر لکھ دیاا س کے با و جود پلا ٹ نہ مل سکا اعلی افسران ذلیل و خو ار کروانے لگے ،سی ڈی اے چئیر مین اور وزیر اعظم نو از شر یف سے اپیل کی ہے کہ مجھے میر ا حق دیا جا ئے تا کہ میں اپنی زند گی خو ش اسلو بی سے گذ ار سکو ں ،تفصیلا ت کے مطا بق سی ڈی اے مینٹینسں ٹو کا ریٹائرڈ ملازم اپنے حق کے در بدر کی ٹھوکریں کھانے لگا 2006 میں پلاٹ الاٹ ہونے کے باجودریٹائرمنٹ کے بعد بھی پلاٹ کے حق سے محروم ہے جبکہ دیگر 18 ملازمین کو پلاٹ مل چکے ہیں شعبہ اسٹیٹ کی جانب سے تعاون نہ ہونے پر فائل کو دبا دیا گیا سی ڈی اے قانون ہی نرالا ہے اپنے ہی ملازین حق سے محروم رہنے لگے سی ڈی اے مینٹینس شعبہ ٹو کے ملازم محمد اقبال کو 2006 میں سی ڈی اے کی جانب سے پلاٹ الاٹ ہوا اس وقت قرعہ اندازی کے ذریعے 19 ملازمین کے نام پلاٹ کے لیے چنے گئے تھے جس میں سے 18ملا ز مین کو پلا ٹ دئیے جا چکے ہیں لسٹ میں محمد اقبال کا نام بھی شامل تھا محمد اقبال  2011میں ریٹائرڈ ہو گیا ریٹائرمنٹ کے بعد 6  سال گزرنے کے باوجود بھی محمد اقبال کو اسکا حق نہیں مل سکا سی ڈی اے چیئرمین کو بھی محمد اقبال کی جانب سے درخواست دی گئی لیکن ابھی تک کوئی عمل نہیں ہوسکا میڈ یا سے با ت چیت کر تے ہوئے محمد اقبال نے کہا کہ سی ڈی اے والے میرے حق کو مانتے ہیں لیکن میرا حق مجھے نہیں دیا جا رہا مجھے انصاف دیا جائے اس حوالے سے جب DGاسٹیٹ سے با ت کی گئی تو انہو ں نے کہا کہ میں مکمل فا ئل چیک کر کے 763پلا ٹ کا فیصلہ کر دو ں گا ،اور محمد اقبا ل کا پلا ٹ پر حق ہے جس کو دیا جا ئے گا ۔

Read more

اسلا م آباد ،ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنیوالوںکے خلاف کارروائی

وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خاں صاحب کی خصوصی ہدایت پر اسلا م آباد ٹریفک پولیس کی ٹریفک قوانین خصوصاً لین اور لائن ڈسپلن کے خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف کاروائی، گزشتہ 3ماہ میں19460کو چالان جبکہ1030گاڑیوں کو تھانہ میں بند کر دیا گیا ،21270روڈ استعمال کرنے والوں کو مدد بھی فراہم کی گئی ، شہری ٹریفک قوانین خصوصاً لین اورلائن کی پاسداری کریںتاکہ حادثات کو کم سے کیا جا سکے،ایس ایس پی ٹریفک ملک مطلوب احمد تفصیلات کے مطابق وزیر داخلہ چوہدری نثارعلی خان صاحب کی خصوصی ہدایت پر اسلام آباد ٹریفک پولیس کی جانب سے روڈ استعمال کرنے والے شہریوں کے جان و مال کے تحفظ کویقینی بنانے کے لئے خصوصی مہم کامیابی سے جاری ہے مہم کے دوران اسلام آباد ٹریفک پولیس نے گزشتہ 3ماہ میں ٹریفک قوانین کے خلاف ورزی کرنے والی19460گاڑیوں کے خلاف کاروائی کی اور7767800روپے جرمانہ کیا گیاجن میں لین وائلیشن کرنے والے9811،ریڈ سگنل کے خلاف ورزی کرنے والے 6352،غیر محتاط گاڑی چلانے والے 1929،1368کم عمر ڈرائیورز کے خلاف کاروائی عمل میں لائی گئی،جبکہ1030 گاڑیوں کو تھانہ میں بند کر کے466000روپے جرمانہ کیا گیا،اسلام آباد ٹریفک پولیس نے گزشتہ 3ماہ میں 21270روڈ استعمال کرنے والوں کومدد فراہم کی ،اس کے علاوہ 413ورکشاپس میں176675افراد کو آگاہی بھی دی گئی ،جس میں آئی ٹی پی ہیڈ کوارٹر میں منعقد کردہ 127ورکشاپس کے دوران 2660لرنرز اور وائلیٹرز ،پرائیویٹ اداروں میں 02ورکشاپس کے دوران 85افراد کو ،سرکاروں اداروں میں 230افراد،روڈ سیفٹی پر8 کیمپس کے دوران24000افراد ،مختلف سکولوں اور تعلیمی اداروں میں 7800جبکہ5400افرادکو روڈ پر آگاہی فراہم کی گئی، 65000سے زائد موٹر سائیکل کو چیک اور1500موٹر سائیکلوںکو مرمت کیا گیا، عوام میں آگاہی فراہم کرنے کے لئے مختلف سڑکوں پر70000سے زائد پمفلٹس بھی تقسیم کئے گئے، ایس ایس پی ٹریفک کی جانب سے تشکیل دیئے گئے سپیشل سکواڈ اسلام آباد کی مختلف شاہراہوں اور چوکوں میں تعینات ہیں جوعوام میں آگاہی فراہم کرنے کے ساتھ ساتھ لین، لائن ڈسپلن اور دیگر ٹریفک قوانین کے خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف سخت قانونی کاروائی بھی کر رہے ہیں ،ایس ایس پی ٹریفک ملک مطلوب احمد صاحب نے شہریوں سے اپیل کی ہے کہ شہری ٹریفک قوانین خصوصاً لین اور لائن کی پابندی کریں تاکہ حادثات کو کم سے کم کیا جا سکے ۔


Read more

پولیس کی مبینہ سرپرستی ،تھانہ بنی کے علاقوںمیںجوئے کا دھندہ عروج پر

 تھانہ بنی کے علاقے ڈالڈا سراں ،بھابڑا بازار،جھنگی محلہ ،سید پوری گیٹ ،شاہ نذر دیوان میں پولیس کی مبینہ سرپرستی میں سر عام جوئے کا دھندہ عروج پر جبکہ منشیات فروشی ،کے مقروع دحندے کی بدولت نوجوان نسل تباہی کی جانب راغب ہو رہی ہے راہ زنی ،چوری ،اور ڈکیتی کی بڑھتی ہوئی وارداتوں نے اہلیان علاقہ کا جینا دوبھر کر دیا ہے جبکہ پولیس جی جانب سے شہر بھر میں جگہ جگہ ناکے لگا رکھے ہیں اس کے باوجود رہائشی علاقوں میں سماج دشمن کا کھلے عام وارداتیں پولیس کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے تفصیلات کے مطابق مذکورہ بالا علاقوں کی گلی محلوں میں بلیڈ کلبوں کی بھرمار اور ان میں صبح سے لیکر رات گئے تک جواء کھیلا جاتا ہے جس کی وجہ سے علاقہ کی نوجوان نسل بری طرح سے جواء کی لت میں مبتلا ہو رہی ہے علاقہ مکینوں نے مذکورہ اڈوں کے خلاف شدید احتجاج کرتے ہوئے آر ،پی او اور سی پی او ،راولپنڈی سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ تھانہ بنی کے علاقوں میں ہونے والے جوئے کے اڈے کو فی الفور بند کرے تاکہ علاقہ مکین سکھ کا سانس لے سکیں ۔ذرائع کے مطابق تھانہ بنی کی ناک تلے سید پوری گیٹ ،شاہ نذر دیوان بیلیڈ کلبوںاور منشیات فروشی کی سر پرستی کر رہے ہیں جہاں دن رات کے وقت جواہ کھیلا اور منشیات بیچی جا رہی ہے ذرائع کے مطابق مذکورہ اڈے پولیس کی مبینہ سر پرستی میںہزاروں روپے کا جواء کراتے ہیں جہاں راولپنڈی کے مضافاتی علاقوں سمیت شہر و کینٹ کے مختلف علاقوں سے روزانہ درجنوں جواری اکھٹے ہو کر جوا ء کھیلتے ہیں جس کی وجہ سے علاقہ کی نوجوان نسل بھی بری طرح جوئے کی لت میں مبتلا ہو کر گھر کا قیمتی سامان فروخت کرنے لگے ہیں اس ضمن میں علاقہ مکینوں نے متعلقہ پولیس کو متعدد بار شکائت بھی کی لیکن بدقسمتی سے پولیس ان پر ہاتھ ڈالتے ہوئے مکمل طور پر کتراتی ہے ذرائع کا کہنا ہے کہ جس کی وجہ سے جواریوں ،منشیات فروشوں ، چوروں اور ڈکیتوں کو کھلی چھوٹ ملی ہوئی ہے علاقہ مکینوں نے وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان ، آرپی او ، اور سی پی او سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ مذکورہ اڈوں کو فی الفور بند کرائے تاکہ علاقہ کی نوجوان نسل جوئے اور منشیات جیسی لعنت سے مکمل طور پر چھٹکارا حاصل کر سکے ۔


Read more

دواساز اداروں کو مکمل صنعت کا درجہ دیا جائے،راجہ عامر اقبال

دواساز اداروں کو مکمل صنعت کا درجہ دیا جائے، صوبائی سطح پر پورے ملک میں یکساں قوانین لاگو کیے جائیں سخت، دوہرے اور بلا جواز قوانین کے باعث سرمایا کار بھاگنے پر مجبور ہو رہے ہیںاور فارما ساز ادارے اپنے کاروبار دوسرے صوبوں کی جانب منتقل کرنے کا سوچ رہے ہیں جہاں نرم قوانین ہیں ان خیالات کا اظہار راولپنڈی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدرر اجہ عامر اقبال نے راولپنڈی چیمبر میں تاجروں کے ایک وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ ملک میں ادویات سازی ساڑھے تین سو ارب روپے سے زاہد کی انڈسٹری ہے اور لاکھوں لوگوں کا روزگار اس شعبے سے وابستہ ہے وفاقی حکومت کو چایئے کہ وہ پورے ملک میں یکساں پالیسی لائے تاکہ صنعت دوسرے صوبوں کو منتقل نہ ہو اور مقابلے کی فضا برقرار رہے حکومت فوری توجہ دے قوانین میں نرمی لائے ، ٹیکسوں میں چھوٹ دے اور مراعات کا اعلان کرے تاکہ دوائیں سستی ہوں اور عوام کو ریلیف بھی ملے صدر چیمبر نے کہا کہ فارما انڈسٹری راولپنڈی کی بھی سب سے بڑی انڈسٹری ہے لیکن سہولیات نہ ملنے کی وجہ سے مسائل کا شکار ہے حکومت کو چایئے کہ صنعت کو سہولیات فراہم کرے تا کہ مسائل کو حل کرکے برآمدات کو فروغ دیا جا سکے ۔ وفاقی حکومت ایکسپورٹ کو بڑھانے کی بات کرتی ہے لیکن خود ہی ایسے قوانین بنا رکھے ہیں جس سے فارما انڈسٹری سے وابستہ افراد مشکلات کا شکار ہیں ، ہمسایہ ملک میں ون ونڈو آپریشن سے مسائل چند دن میں حل ہوتے ہیں جبکہ پاکستان میں مہینوں بعد بھی کام نہیں ہو پاتا جس کی وجہ سے حکومت کو ریونیو کی مد میں سالانہ اربوں روپے کا نقصان ہو رہا ہے۔


Read more

تھانہ تر نو ل کے مختلف علاقوں میں سکیورتی اداروں کا سرچ آپریشن

وفاقی دار الحکومت میں سیکیورٹی کو فول پروف بنانے اور نیشنل ایکشن پلان پر عمل در آمد کرتے ہوئے تھانہ تر نو ل کے مختلف علاقوں میں پولیس ، رینجرز اور انٹیلی جنس اداروں نے مشترکہ سرچ آپریشن کیا ،16 مشتبہ افراد کو حر است میں لے کر تحقیقات شروع کر دی گئیں ،200 گھر وںکی تلاشی لی گئی ،دوران سر چ آ پر یشن سلحہ معہ ایمو نیشن بر آمدکر لیا گیا، ایس ایس پی آپریشنز ساجد کیانی نے زیادہ سے زیادہ سرچ آپریشنز کی ہدایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ سیکیورٹی کے ساتھ ساتھ شہریوں کے جان و مال کے تحفظ کو یقینی بنانا پولیس کی اولین ذمہ داری ہے ،تفصیلا ت کے مطا بق گزشتہ روز اسلام آ باد پولیس ، پا کستا ن رینجر ز ، حسا س اداروںکے افسران و جو انو ں جس میں کما نڈو ز ، لیڈ ی کما نڈو ز ، بم ڈسپو زل اسکو اڈ شامل تھے نیتھا نہ تر نو ل کے مختلف علا قوں سیکٹر D-17 اورگردو نواح میں سرچ آپریشن کیا ، یہ سرچ آپریشن ایس پی صدر کی زیر نگر انی میں ڈی ایس پی صدر سرکل ، ایس ایچ او تر نو ل انسپکٹرسجا د احمد بخا ری اور دیگر پولیس افسران نے حصہ لیا،سرچ آپریشن کے دوران16مشتبہ افراد کو حر است میںلے کرتحقیقات شروع کر دیں ، دوران سر چ آ پر یشن اسلحہ معہ ایمو نیشن بر آمدکر لیا گیا،ملزمان کے خلاف نا جا ئز اسلحہ کی بر آمد گی کے الگ الگ مقدمات درج کر لئے گئے ہیں، سر چ آپر یشن کے دوران 200گھر وں کو سر چ کیا گیاایس ایس پی اسلام آ باد ساجد کیانی نے تمام افسران کو ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا کہ وہ اپنے اپنے علاقوں میں سرچ آپریشن کو جاری رکھیں اور جرائم پیشہ عناصر کے گرد گھیرا تنگ کرتے ہوئے ان کو گرفتار کیا جائے تاکہ شہریوں کی جان و مال کے تحفظ کو یقینی بنایا جا سکے۔


Read more

اسلام آباد کو پاکستان کا نہیں دنیا کا خوبصورت ترین شہر بنائینگے،شیخ انصر

مئیر اسلام آباد و چیئر مین سی ڈی اے شیخ انصر عزیز نے کہا ہے کہ اسلام آباد کو خوبصورت بنانے کے لئے ایم سی آئی نے ایک جا مع حکمت عملی بنائی ہے جس کے تحت نجی شعبے کے اشتراک سے اسلام آباد کومزید خوبصورت اور ماڈل شہر بنایا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ مختلف اداروں کو ترقی کے عمل میں شامل کر کے جہاں لوگوں میں شہر سے اپنایت میں اضافہ ہو گا وہاں شہر کی خوبصورتی کو برقرار رکھنے میں بھی مدد ملے گی۔ان خیالات کا اظہار میئر اسلام آباد و چیئرمین سی ڈی اے شیخ انصر عزیز نے رفاہ یونیورسٹی کی طرف سے H-8 رائونڈ ابائوٹ کی تزئن و آرائش کے کام کے افتتاح کے موقع پر کیا ۔ اس موقع پر رفاہ یونیورسٹی کے چانسلر ڈاکٹر حسن محمد خان، وائس چانسلر ،ڈاکٹر انیس اور ایم سی آئی کے سینئر افسران کے علاوہ رفاہ یونیورسٹی کے سینئر فیکلٹی ممبرز بھی موجود تھے ۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے میئر اسلام آباد و چیئرمین سی ڈی اے شیخ انصر عزیز نے کہا کہ ترقی کے عمل میں اسلام آباد کے تمام سٹیک ہولڈرز کو شریک کیا جا رہا ہے تاکہ اسلام آباد کو صحیح معنوں میں ایک جدید اور ماڈل شہر بنایا جا سکے۔ نجی اداروں کی طرف سے شہر کی خوبصورتی میں حصہ لینے کے قدم کو سراہتے ہوئے انہوں نے کہا کہ نجی شعبوں بالخصوص تعلیمی اداروں کا اسطرح ترقیاتی عمل میں شریک ہونا ایک نئے باب کا آغاز ہے جس سے اسلام آباد کو نہ صرف پاکستان کا خوبصورت شہر بلکہ دنیا کا خوبصورت ترین شہر بنایا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ مختلف اداروں کی مدد سے کارپوریٹ سماجی ذمہ داری فنڈ کے تحت اسلام آباد کی شاہرائوں ، سڑکوں ، پارکوں ،کھیل کے میدانوں اور تفریخ مقاموں کے علاوہ گرین بیلٹس ،میڈین سٹریپس ،رائونڈ ابائوٹس اور دیگر جگہوں کی نہ صرف تعمیر و مرمت کے ساتھ ساتھ انکی دیکھ بھال بھی کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ رفاہ یونیورسٹی ان اداروں میں سے ایک ہے جنہوں نے کارپوریٹ سماجی ذمہ داری کے تحت شہر کی تعمیر و ترقی کے لیے قدم بڑھایا اور اس رائونڈ ابائوٹ کی اپ گریڈیشن کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ شہر ہم سب کی پہچان ہے اس لیے اس کو خوبصورت بنانے کے لیے تمام لوگوں کو اپنا کردار ادا کرنا ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ رفاہ یونیورسٹی نے اس منصوبے پر پہل کر کے معاشرتی ذمہ داری کا ثبوت دیا ہے۔ ڈاک۔۔۔ نے کہا کہ اسلام آباد ہمارا شہر ہے اور اس کی خوبصورتی کو بڑھانے اور برقرار رکھنے کے لیے کام کرنا ہماری سماجی ذمہ داری ہے۔ انہوں نے کہا کہ رفاہ یونیورسٹی اسلام آباد کی خوبصورتی اور تعمیر و ترقی کے لیے کیے جانے والے ایم سی آئی اور سی ڈی اے کے تمام منصوبوں میں بھرپور تعاون اور ساتھ دے گی۔ اس موقع پر میئر اسلام آباد و چیئرمین سی ڈی اے کو بتایا گیا کہ رفاہ یونیورسٹی نے کارپوریٹ سماجی ذمہ داری کے تحت ایچ ایٹ راونڈ ابائوٹ کی تعمیر کے ساتھ ساتھ دیدہ زیب لینڈ سکیپنگ اور اپ لفٹنگ کی ذمہ داری اٹھائی ہے ۔ انہیں بتایا گیا کہ اس کی تکمیل کے بعد رفاہ یونیورسٹی اور ایم سی آئی مل کر اس کی دیکھ بھال کی ذمہ لین گے اور اس کی خوبصورتی کو برقرار رکھنے کے لیے مل کر اقدامات کریں گے۔


Read more

برطانیہ کے لیے نئے قوانین متعارف کرائے جائیں گے

برطانیہ کے یورپی یونین سے علیحدگی کا عمل شروع ہونے کے بعد اب یورپی یونین کے ہزاروں قوانین کو یا تو ختم کر دیا جائے گا یا پھر ان کی جگہ نئے برطانوی قوانین متعارف کروائے جائیں گے۔میڈیارپورٹس کے مطابق برطانیہ کی یورپی یونین سے علیحدگی کے پیش نظر یورپی قوانین کو اب برطانوی قوانین میں بدلنا پڑے گا ورنہ ایک ایسی صورت حال پیدا ہو سکتی ہے جہاں ایک قانونی خلا رہ جائے گا۔ایک بیان میں وزیر برائے بریگزِٹ ڈیوِڈ ڈیوِس نے کہا کہ اس ریپیل بِل کے تحت یورپی یونین سے علیحدگی کے فوراً بعد کاروبار حسب معمول کام کر سکیں گے اور انہیں پتہ ہوگا کہ قوانین راتوں رات بدل نہیں گئے ہیںاس کا مطلب ہوگا کہ مزدوروں کے حقوق، ماحولیاتی تحفظ اور صارفین کے حقوق پر یورپی قوانین ہی برقرار رہیں گے لیکن پارلیمان چاہے تو بعد میں ان میں تبدیلی کر سکتی ہے۔ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ اس بِل سے برطانیہ میں یورپی یونین کے قانون کی بالادستی ختم ہو جائے گی، جیسا کہ پچھلے سال ہونے والے ریفرنڈم میں فیصلہ ہوا تھا۔ارکان پارلیمان سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہمارے قوانین لندن، ایڈنبرا اور کارڈف میں بنائے جائیں گے، اور برطانوی جج ان کی وضاحت کریں گے، نہ کہ لکزمبرگ میں بیٹھے جج صاحبان۔ ڈیوس نے کہا کہ اس طرح سے بدلے جانے والے قوانین صرف وقتی طور پر بدلے جائیں گے، اور ان پر نظر ثانی کی جائے گی۔

Read more

اسرائیل نے غرب اردن میں نئی یہودی بستی کی تعمیر کی منظوری دے دی

اسرائیل نے غرب اردن میں نئی یہودی بستی کی تعمیر کی منظوری دے دی،غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق اسرائیل کی سکیورٹی کابینہ نے گزشتہ روز غرب اردن میں نئی یہودی بستی کی تعمیر کی منظوری دی۔نئی یہودی بستی کی تعمیر کا فیصلہ 20 سال سے زائد عرصہ کے بعد کیا گیا ۔سرکاری سطح پر جاری ہونے والے بیان کے مطابق یہ تعمیرات نابلس کے قریب ایمک شلو کے علاقے میں کی جائیں گی۔اسرائیلی وزیراعظم بن یامین نتن یاہو اسی وقت میں امریکی حکومت کے ساتھ آبادکاری سے متعلقہ اقدامات میں کمی کے حوالے سے امریکی حکومت کے ساتھ مذاکرات کرتے رہے ہیں۔ادھرفلسطینی حکام کی جانب سے اس اقدام کی مذمت کی گئی ہے۔فلسطین لبریشن آگنائزیشن کی ایگزیکٹیو کمیٹی کے رکن حنان اشروی کا کہنا تھا کہ اعلان نے ایک بار بھر ثابت کر دیا ہے کہ اسرائیل استحکام کی ضرورت اور صرف امن کے مقابلے میں غیرقانونی آبادی کی خوشنودی کے لیے عزائم رکھتا ہے۔امریکہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے اس اسرائیلی فیصلے پر تاحال کوئی تبصرہ نہیں کیا گیا جسے متفقہ طور پر منظور کیا گیا ہے۔خیال رہے کہ غرب اردن اور مشرقی یروشیلم میں یہودی آبادکاریاں اسرائیل اور فلسطینیوں کے مابین طویل عرصے سے تنازعے کا باعث ہیں۔سنہ 1967 میں اسرائیل کی جانب سے غرب اردن اور مشرقی یروشلم پر قبضے کے بعد سے یہاں تعمیر ہونے والے 140 بستیوں میں چھ لاکھ کے قریب یہودی آباد ہیں۔یہ آبادکاریاں بین الاقوامی قوانین کے مطابق غیرقانونی ہیں جبکہ اسرائیل اسے تسلیم نہیں کرتا۔
 

Read more

چین ، سٹیج گرنے سے 9افراد ہلاک ، متعدد زخمی

مرکزی چین کے صوبہ ہیبی کی زیر تعمیر پارک میں سٹیج گرنے سے 9افراد ہلاک اور 6زخمی ہو گئے ، لوگوں کو ملبے سے نکالنے اور زخمیوں کو ہسپتال پہنچانے میں ریسکیو ٹیموں نے بڑی مستعدی سے کام کیا تا ہم ملبے سے لاشوں کو نکالنے میں 59گھنٹے لگ گئے ، زخمیوں کو ہسپتال میں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے، یہ پارک ماچینگ شہر میں تعمیر کیا جارہا تھا ،مناسب حفاظتی اقدامات نہ کرنے پر پولیس کو 9افراد کو حراست میں لے لیا ہے ۔ مقامی صوبائی حکام نے حادثہ کی تحقیقات کے لئے ٹیم روانہ کر دی ہے ۔


Read more