Get Adobe Flash player

فاف ڈوپلیسز جنوبی افریقی ٹیم میں زیادہ تبدیلیوں کے مخالف

جنوبی افریقی ٹیسٹ کپتان فاف ڈو پلیسز نے ٹیم کی ذمہ داری سنبھالنے والے ممکنہ ہیڈ کوچ اوٹس گبسن کی جانب سے پروٹیز ٹیم میں بہت زیادہ تبدیلیوں کی مخالفت کرتے ہوئے کہا ہے کہ نئے کوچنگ اسٹاف کو کھلاڑیوں سے مکمل واقفیت میں کچھ وقت لگے گا۔ فاف ڈو پلیسز کے مطابق انہیں یہ علم ہوا ہے کہ رسل ڈومنگو کی جگہ انگلینڈ کے سابق بالنگ کوچ اوٹس گبسن کی تعیناتی کا فیصلہ کوچنگ پینل نے کیا ہے اور ظاہر سی بات ہے کہ نیا ہیڈ کوچ اپنا عہدہ سنبھالنے کے بعد کچھ تبدیلیاں بھی کر سکتا ہے۔ کہا جا رہا ہے کہ پروٹیز کوچنگ اسٹاف میں بھی تبدیلیاں متوقع ہیں لیکن فاف ڈو پلیسز نے بیٹنگ کوچ نیل میکنزی، بالنگ کوچ چارل لانگے فیلٹ اور اسپن بالنگ کوچ کلاڈ ہینڈرسن کو برقرار رکھنے کی حمایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ عقلمندانہ بات تو یہی ہو گی کہ ہول سیل تبدیلیوں کے بجائے چند معمولی چیزوں کو تبدیل کیا جائے کیونکہ اگر نیا کوچنگ اسٹاف لایا گیا تو اسے کھلاڑیوں سے مکمل واقفیت میں کچھ وقت لگے گا جس سے ٹیم کا کامبی نیشن متاثر ہو سکتا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ متوقع کوچ اوٹس گبسن کیلئے زیادہ بہتر یہی ہوگا کہ وہ پہلے آکر اس بات کو محسوس کریں کہ ٹیم کی ضرورت کیا ہے اور اگر انہیں تبدیلیاں درکار ہیں تو اس کیلئے کچھ عرصے میں فیصلہ کیا جائے کیونکہ جنوبی افریقی ٹیم کے موجودہ کوچز اپنی خدمات بہترین انداز سے انجام دے رہے ہیں۔ واضح رہے کہ گزشتہ سیزن میںآسٹریلیا،سری لنکا اور نیوزی لینڈ کیخلاف کامیابیاں حاصل کرنے والی پروٹیز ٹیم کو انگلینڈ کیخلاف تین ،ایک سے ناکامی کا سامنا کرنا پڑاجس کے بعد ہیڈ کوچ کی تبدیلی کا فیصلہ کیا گیااور اوٹس گبسن آئندہ چند روز میں اپنا عہدہ سنبھال سکتے ہیں۔